کرونا وائرس کے باعث پنجاب میں لاک ڈاؤن، دیہاڑی دار طبقہ بیروزگار

کرونا وائرس کی روک تھام کیلئے پنجاب جزوی طورپر بند ہے. جس کے باعث انٹرسٹی ٹرانسپورٹ کمپنیوں میں کام کرنے والے پچاس ہزار سے زائد ڈیلی ویجز ملازمین بےروزگار ہوگئے ہیں. جن میں ڈرائیورز .کنڈکٹرز اور گارڈز شامل ہیں.

جن کیلئے دو دو وقت کی روٹی کھانا مشکل ہوگیا ہے. گھروں کے چولہے ٹھنڈے پڑے ہیں ملازمین حکومت سے مطالبہ کررہے ہیں امداد کا جو اعلان کیا گیا ہے اس کی فراہمی یقینی بنائی جائے.کمپنیاں بھی ان ملازمیں کی مدد کررہی ہیں.

بس ایسو سی ایشن صدر چوہدری گجر نے ملازمین کا ڈیٹا حکومت کو فراہم کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے تاکہ امداد کی فراہمی تمام ملازمین تک ہوسکے.

لاہوری بھی جزوی لاک ڈاون سے پریشان ہیں.لاک ڈاون عوام کیلئے کئی مشکلات لے آیا.شہری کہتے ہیں کہ یوٹیلٹی اسٹورز پر اشیائے ضروریہ غائب ہے. چینی بھی نہیں آٹا بھی ناپید ہوگیا ہے.جائیں تو جائیں کہاں پہلے منافع خوروں نے ذخیرہ اندوزی کرکے سینی ٹائزر اور ماسک کا حصول مشکل بنایا اور اب روز مرہ کی اشیا بھی پہنچ سے دور ہوگئی ہے. عوام نے حکومت سے نوٹس لینے کا مطالبہ کردیا ہے.

شیئرکریں