پاکستان کی فیشن انڈسٹری کو انٹر نیشنل انڈسٹری کے طور پر دیکھنے کی خواہش ہے، کاظم وحید

بہت سے انٹرنیشنل ایونٹس میں پاکستان کی نمائندگی کی، پاکستان میں فیشن کے نام پر پتہ نہیں کیا دکھایا جاتا ہے

لاہور(شوبز رپورٹر)پاکستانی فیشن انڈسٹری کو ہمیشہ انٹرنیشنل انڈسٹری کے طور پر دیکھنے کی خواہش اور کوشش کی ہے، ان خیالات کا اظہار معروف فیشن شو آرگنائزراور ’’دی ایونٹرز پاکستان‘‘کے چیف ایگزیکٹیو کاظم وحید نے ایک ملاقات میں کیا، ایک سوال کے جواب میں کہا کہ میں نے ہمیشہ انٹرنیشنل میعار کے مطابق کام کرنے کی کوشش کی، اور کچھ عرصہ قبل دوبئی میں ایک فیشن شو بھی منعقد کروایا، جس میں میرے ساتھ دوبئی کی رائل فیملی کے لوگ تھے، کاظم وحید نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ پاکستان میں فیشن شوز کے نام پر پتہ نہیں کیا پیش کیا جاتا ہے، کئی فیشن شوزایسے بھی دیکھے ہیں جو فیشن شو کی کیٹیگری میں آتے ہی نہیں ، ایک سوال کے جواب میں کہا کہ میں نے انٹر نیشنل ماڈلز کے ساتھ کام کیا ، ان کے کام کا اپنا سٹائل ہے، ان کے ساتھ کام کرنا اچھا لگتا ہے، کاظم وحید نے کہا کہ اس کا یہ مطلب نہیں کہ پاکستان میں اچھا کام نہیں ہوتا ، بہت سے اچھے لوگ عالمی میعار کا کام کر رہے ہیں، مگر میرے خیال میں فیشن شوز کے نام پر نئے لوگوں کو لوٹنے والوں کا محاسبہ ہونا چاہیئے، ایسے لوگ فیشن انڈسٹری کی خدمت کرنے کی بجائے اپنی دیہاڑیاں لگاتے ہیں،ایک سوال کے جواب میں کاظم وحید نے کہا کہ میں جلد ہی ایک فیشن شو پلان کر رہا ہوں، جس میں پاکستان کی ٹاپ ماڈلز کے ساتھ انٹرنیشنل ماڈلز کو بھی بلایا جائے گا، ابھی اس پراجیکٹ پر کام جاری ہے،

شیئرکریں
  • 6
    Shares

اپنا تبصرہ بھیجیں